کچھ دن تو بسو مری آنکھوں میں (ردیف .. ا)

عبید اللہ علیم

کچھ دن تو بسو مری آنکھوں میں (ردیف .. ا)

عبید اللہ علیم

MORE BYعبید اللہ علیم

    کچھ دن تو بسو مری آنکھوں میں

    پھر خواب اگر ہو جاؤ تو کیا

    کوئی رنگ تو دو مرے چہرے کو

    پھر زخم اگر مہکاؤ تو کیا

    جب ہم ہی نہ مہکے پھر صاحب

    تم باد صبا کہلاؤ تو کیا

    اک آئنہ تھا سو ٹوٹ گیا

    اب خود سے اگر شرماؤ تو کیا

    تم آس بندھانے والے تھے

    اب تم بھی ہمیں ٹھکراؤ تو کیا

    دنیا بھی وہی اور تم بھی وہی

    پھر تم سے آس لگاؤ تو کیا

    میں تنہا تھا میں تنہا ہوں

    تم آؤ تو کیا نہ آؤ تو کیا

    جب دیکھنے والا کوئی نہیں

    بجھ جاؤ تو کیا گہناؤ تو کیا

    اب وہم ہے یہ دنیا اس میں

    کچھ کھوؤ تو کیا اور پاؤ تو کیا

    ہے یوں بھی زیاں اور یوں بھی زیاں

    جی جاؤ تو کیا مر جاؤ تو کیا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    بلقیس خانم

    بلقیس خانم

    Tagged Under

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY