کچھ اس ادا سے محبت شناس ہونا ہے

راہل جھا

کچھ اس ادا سے محبت شناس ہونا ہے

راہل جھا

MORE BYراہل جھا

    کچھ اس ادا سے محبت شناس ہونا ہے

    خوشی کے باب میں مجھ کو اداس ہونا ہے

    میں آج سوگ منانا سکھانے والا ہوں

    ادھر کو آئیں جنہیں محو یاس ہونا ہے

    نشست روح میں پاکیزگی ہے شرط مگر

    بدن کی بزم میں بس خوش لباس ہونا ہے

    میں خود ہی ہوتا ہوں اپنی نشاط کا باعث

    سو مجھ کو خود مرے غم کی اساس ہونا ہے

    ازل سے میری حفاظت کا فرض ہے ان پر

    سبھی دکھوں کو میرے آس پاس ہونا ہے

    یہ عاشقی ترے بس کی نہیں سو رہنے دے

    کہ تیرا کام تو بس نا سپاس ہونا ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY