کچھ اس کو یاد کروں اس کا انتظار کروں

احمد ہمدانی

کچھ اس کو یاد کروں اس کا انتظار کروں

احمد ہمدانی

MORE BY احمد ہمدانی

    کچھ اس کو یاد کروں اس کا انتظار کروں

    بہت سکوت ہے میں خود کو بے قرار کروں

    بھروں میں رنگ نئے مضمحل تمنا میں

    اداس رات کو آسودۂ بہار کروں

    کچھ اور چاہ بڑھاؤں کچھ اور درد سہوں

    جو مجھ سے دور ہے یوں اس کو ہم کنار کروں

    وفا کے نام پہ کیا کیا جفائیں ہوتی رہیں

    میں ہر لباس جفا آج تار تار کروں

    وہ میری راہ میں کانٹے بچھائے میں لیکن

    اسی کو پیار کروں اس پہ اعتبار کروں

    یہ میرے خواب مری زندگی کا سرمایہ

    نہ کیوں یہ خواب بھی میں آج نذر یار کروں

    مآخذ:

    • Book : Pakistani Adab (Pg. 298)
    • Author : Dr. Rashid Amjad
    • مطبع : Pakistan Academy of Letters, Islambad, Pakistan (2009)
    • اشاعت : 2009

    Tagged Under

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY