کیا ہے اونچائی محبت کی بتاتے جاؤ

آتش اندوری

کیا ہے اونچائی محبت کی بتاتے جاؤ

آتش اندوری

MORE BYآتش اندوری

    کیا ہے اونچائی محبت کی بتاتے جاؤ

    پنچھیوں اڑ کے یوں ہی خواب دکھاتے جاؤ

    پیڑ پتھر کا جواب آج بھی دیتے پھل سے

    چوٹ کھاؤ بھلے پر رشتہ نبھاتے جاؤ

    یوں بھی پیغام محبت کا پہنچ جائے گا

    ساتھ انساں کے پرندوں کو بساتے جاؤ

    شہر میں کام بہت سارے سمے لیکن کم

    مت کرو بات مگر ہاتھ ہلاتے جاؤ

    اک دو مت بھید تو ہر گھر میں ہوا کرتے ہیں

    ان کو نیتا جی ہوا مت دو بجھاتے جاؤ

    گاؤں میں ناؤ تھی کاغذ کی سفر آساں تھا

    اک مسافر ہوں یہاں راہ دکھاتے جاؤ

    گالیاں ایسے ہی دو مجھ کو ہمیشہ آتشؔ

    غلطیاں میری اسی طرح بتاتے جاؤ

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY