کیا شوخ اچپلے ہیں تیرے نین ممولا

آبرو شاہ مبارک

کیا شوخ اچپلے ہیں تیرے نین ممولا

آبرو شاہ مبارک

MORE BY آبرو شاہ مبارک

    INTERESTING FACT

    ممولا بھی آبروؔ کی معشوقہ کا نام تھا

    کیا شوخ اچپلے ہیں تیرے نین ممولا

    جن کوں نرکھ جلے ہیں سب من ہرن ممولا

    بر میں خیال کے بھی کیوں کر کے آ سکے دل

    نازک ہے جان سیتی تیرا بدن ممولا

    جو اک نگہ کرو تم کرتے ہو کام سو تم

    سیکھے کہاں سیں ہو تم یہ مکر و فن ممولا

    آزاد سب جگت کے آ کر غلام ہوویں

    جب بودلی بناوے اپنا برن ممولا

    قد سرو چشم نرگس رخ گل دہان غنچہ

    کرتا ہوں دیکھ تم کوں سیر چمن ممولا

    ہر رات شمع کے جوں جلتی ہے جان میری

    جب سیں لگی ہے تم سیں دل کی لگن ممولا

    مآخذ:

    • Book : Deewan-e-Aabro (Pg. 84)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY