کیوں بگولوں کی جستجو کیجے

محمد اسد اللہ

کیوں بگولوں کی جستجو کیجے

محمد اسد اللہ

MORE BY محمد اسد اللہ

    کیوں بگولوں کی جستجو کیجے

    دل کہاں تک لہو لہو کیجے

    کھو گئیں ہم نوائیاں ساری

    اپنے سائے سے گفتگو کیجے

    دیکھیے وقت کس طرح گزرا

    خود کے شیشے کے روبرو کیجے

    آرزو ہی تو زندگی ہے یہاں

    زندگی ہے تو آرزو کیجے

    لے چکی انتقام خاموشی

    اب تو کچھ ہم سے گفتگو کیجے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY