لمحہ لمحہ بار ہے تیرے بغیر

شکیل بدایونی

لمحہ لمحہ بار ہے تیرے بغیر

شکیل بدایونی

MORE BY شکیل بدایونی

    لمحہ لمحہ بار ہے تیرے بغیر

    زندگی دشوار ہے تیرے بغیر

    دل کی بے تابی کا عالم کیا کہوں

    ہر نفس تلوار ہے تیرے بغیر

    مجمع احباب و ارباب وفا

    مجمع اغیار ہے تیرے بغیر

    تجھ سے برہم ہوں کبھی خود سے خفا

    کچھ عجب رفتار ہے تیرے بغیر

    زندگی سے موت اک اک گام پر

    بر سر پیکار ہے تیرے بغیر

    عالم فرقت میں ذکر خواب کیا

    نیند خود بیدار ہے تیرے بغیر

    شام غم کروٹ بدلتا ہی نہیں

    وقت بھی خوددار ہے تیرے بغیر

    آ مسیحا آ کہ اب تیرا شکیلؔ

    جان سے بے زار ہے تیرے بغیر

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    لمحہ لمحہ بار ہے تیرے بغیر نعمان شوق

    Tagged Under

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY