لطف کی ان سے التجا نہ کریں

حسرتؔ موہانی

لطف کی ان سے التجا نہ کریں

حسرتؔ موہانی

MORE BY حسرتؔ موہانی

    لطف کی ان سے التجا نہ کریں

    ہم نے ایسا کبھی کیا نہ کریں

    مل رہے گا جو ان سے ملنا ہے

    لب کو شرمندۂ دعا نہ کریں

    صبر مشکل ہے آرزو بے کار

    کیا کریں عاشقی میں کیا نہ کریں

    مسلک عشق میں ہے فکر حرام

    دل کو تدبیرآشنا نہ کریں

    بھول ہی جائیں ہم کو یہ تو نہ ہو

    لوگ میرے لیے دعا نہ کریں

    مرضئ یار کے خلاف نہ ہو

    کون کہتا ہے وہ جفا نہ کریں

    شوق ان کا سو مٹ چکا حسرتؔ

    کیا کریں ہم اگر وفا نہ کریں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY