میں وہ ہوں جس پہ ابر کا سایہ پڑا نہیں

ساقی فاروقی

میں وہ ہوں جس پہ ابر کا سایہ پڑا نہیں

ساقی فاروقی

MORE BY ساقی فاروقی

    میں وہ ہوں جس پہ ابر کا سایہ پڑا نہیں

    بنجر پڑا ہوا ہوں کوئی دیکھتا نہیں

    میں تو خدا کے ساتھ وفادار بھی رہا

    یہ ذات کا طلسم مگر ٹوٹتا نہیں

    یوں ٹوٹتا ضرور بکھرتا ضرور ہوں

    میں چاک پیرہن نہیں خونیں قبا نہیں

    میں نے الجھ کے دیکھ لیا اپنی گونج سے

    اب کیا صدا لگاؤں کوئی جاگتا نہیں

    حد بندئ خزاں سے حصار بہار تک

    جاں رقص کر سکے تو کوئی فاصلہ نہیں

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    میں وہ ہوں جس پہ ابر کا سایہ پڑا نہیں نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed from your favorites