میرے خوابوں کو نگلنے کا ارادہ نہ کرے

عالم نظامی

میرے خوابوں کو نگلنے کا ارادہ نہ کرے

عالم نظامی

MORE BYعالم نظامی

    میرے خوابوں کو نگلنے کا ارادہ نہ کرے

    کہہ دو سورج سے نکلنے کا ارادہ نہ کرے

    اس سے بڑھ کر کوئی محتاج نہیں ہو سکتا

    گر کے جو شخص سنبھلنے کا ارادہ نہ کرے

    جو ہواؤں کے مزاجوں سے نہیں ہے واقف

    میرے ہم راہ وہ چلنے کا ارادہ نہ کرے

    گفتگو زہر بھری سن لے جو انسانوں کی

    سانپ بھی زہر اگلنے کا ارادہ نہ کرے

    اپنی قسمت میں ہے منزل تو خود آ جائے گی

    اب جنوں راہ بدلنے کا ارادہ نہ کرے

    نیتیں صاف گھٹاؤں کی نہیں ہیں عالمؔ

    چاند سے کہہ دو نکلنے کا ارادہ نہ کرے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY
    بولیے