مل اس پری سے کیا کیا ہوا دل

ولی اللہ محب

مل اس پری سے کیا کیا ہوا دل

ولی اللہ محب

MORE BYولی اللہ محب

    مل اس پری سے کیا کیا ہوا دل

    شیدا ہوا دل رسوا ہوا دل

    برق تجلی دیکھ اس نگہ کی

    جوں طور جل کر سرما ہوا دل

    اس سنگ دل کی مے خوار گی سے

    خون جگر میں مینا ہوا دل

    ہیں منقسم یہ خوں بار آنکھیں

    جن کی بدولت دریا ہوا دل

    جوش جنوں سے عشق بتاں میں

    سینا ہوا کوہ صحرا ہوا دل

    سوزاں ہے از بس داغ محبت

    اک اک کا سا شعلہ ہوا دل

    یوں ہی محبؔ تھی خواہش خدا کی

    اب تو بتاں کا بندہ ہوا دل

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے