محبت کیا صلیب زندگی ہے

سوہن راہی

محبت کیا صلیب زندگی ہے

سوہن راہی

MORE BYسوہن راہی

    محبت کیا صلیب زندگی ہے

    دل رسوا کا حاصل خودکشی ہے

    خود اپنی خواہشوں کے آستاں پر

    پریشاں حال کتنا آدمی ہے

    شب دیر و حرم سے میکدے تک

    مرے ہی آنسوؤں کی روشنی ہے

    پلائی عمر بھر ساقی نے لیکن

    مری قسمت میں اب تک تشنگی ہے

    ہم اپنے آپ کے قاتل بنے ہیں

    یہ کس تہذیب کی جادوگری ہے

    سنو آواز تم میرے لہو کی

    یہی تو راز حسن شاعری ہے

    خفا ہے ان دنوں راہیؔ سے منزل

    اگرچہ خوب تیری رہبری ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY