محتاج ہم سفر کی مسافت نہ تھی مری

اعتبار ساجد

محتاج ہم سفر کی مسافت نہ تھی مری

اعتبار ساجد

MORE BYاعتبار ساجد

    محتاج ہم سفر کی مسافت نہ تھی مری

    سب ساتھ تھے کسی سے رفاقت نہ تھی مری

    حق کس سے مانگتا کہ مکینوں کے ساتھ ساتھ

    دیوار و بام و در کو ضرورت نہ تھی مری

    سچ بول کے بھی دیکھ لیا ان کے سامنے

    لیکن انہیں پسند صداقت نہ تھی مری

    میں جن پہ مر مٹا تھا وہ کاغذ کے پھول تھے

    رسمی مکالمے تھے محبت نہ تھی مری

    جو دوسروں کے دکھ تھے وہی میرے دکھ بھی تھے

    کچھ ایسی مختلف بھی حکایت نہ تھی مری

    بس کچھ اصول تھے جو بہ ہر حال تھے عزیز

    جانم کسی سے ورنہ عداوت نہ تھی مری

    مأخذ :
    • کتاب : Mujhe Koi Sham Udhar Do (Pg. 106)
    • Author : Aitabar Sajid
    • مطبع : Ilm o Irfan Publishers Lahore (2007,2009)
    • اشاعت : 2007,2009

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY