مقابلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

مظفر رزمی

مقابلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

مظفر رزمی

MORE BY مظفر رزمی

    مقابلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

    یہ ولولے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

    قریب آؤ تو شاید سمجھ میں آ جائے

    کہ فاصلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

    ہے میرے ساتھ مرے دشمنوں سے ربط انہیں

    یہ سلسلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

    اگر ہے کوئی شکایت تو مل کے بات کرو

    مراسلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

    کسی نے قتل کیا اور سزا کسی کو ملی

    یہ فیصلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

    جو رہزنوں کا تعاون قبول کرتے ہیں

    وہ قافلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

    تنازعات میں بہتر ہے صلح کر لینا

    نئے گلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

    یہ لغزشوں کا تسلسل یہ معذرت پیہم

    یہ مرحلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

    چراغ حق ہیں تو خاموش کیوں ہیں وہ رزمیؔ

    بنا جلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    مقابلے تو غلط فہمیاں بڑھاتے ہیں نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY