نہ روندو کانچ سی راہیں ہماری

نواز عصیمی

نہ روندو کانچ سی راہیں ہماری

نواز عصیمی

MORE BYنواز عصیمی

    نہ روندو کانچ سی راہیں ہماری

    تمہیں چبھ جائیں گی کرچیں ہماری

    مسلسل دھوکہ بازی کر رہی ہیں

    ہیں دھوکہ باز سب سانسیں ہماری

    ہمیں خاموش ہی رہنے دو یارو

    تمہیں چبھ جائیں گی باتیں ہماری

    کرو ظلم و ستم پر یاد رکھو

    بہت پر سوز ہیں آہیں ہماری

    ہر اک پل ریزہ ریزہ ہو رہی ہیں

    ہیں بوسیدہ تمنائیں ہماری

    جڑیں تحت الثریٰ کی تہہ تلک ہیں

    مگر محدود ہیں شاخیں ہماری

    ہر اک موسم میں آنسو اگ رہے ہیں

    بڑی زرخیز ہیں آنکھیں ہماری

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے