نقش ماضی کے جو باقی ہیں مٹا مت دینا

اقبال عظیم

نقش ماضی کے جو باقی ہیں مٹا مت دینا

اقبال عظیم

MORE BYاقبال عظیم

    نقش ماضی کے جو باقی ہیں مٹا مت دینا

    یہ بزرگوں کی امانت ہے گنوا مت دینا

    وہ جو رزاق حقیقی ہے اسی سے مانگو

    رزق برحق ہے کہیں اور صدا مت دینا

    بھیک مانگو بھی تو بچوں سے چھپا کر مانگو

    تم بھکاری ہو کہیں ان کو بتا مت دینا

    صبح صادق میں بہت دیر نہیں ہے لیکن

    کہیں عجلت میں چراغوں کو بجھا مت دینا

    میں نے جو کچھ بھی کہا صرف محبت میں کہا

    مجھ کو اس جرم محبت کی سزا مت دینا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    اقبال عظیم

    اقبال عظیم

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY