دل کی طرف حجاب تکلف اٹھا کے دیکھ

فانی بدایونی

دل کی طرف حجاب تکلف اٹھا کے دیکھ

فانی بدایونی

MORE BYفانی بدایونی

    دل کی طرف حجاب تکلف اٹھا کے دیکھ

    آئینہ دیکھ اور ذرا مسکرا کے دیکھ

    اس دور میں یہ طرز جفا آزما کے دیکھ

    دل کے بجائے دل کے سکوں کو مٹا کے دیکھ

    تسلیم کی نظر سے کرشمے رضا کے دیکھ

    بیگانگی دوست کو اپنا بنا کے دیکھ

    اس شورش حیات کو حد سے بڑھا کے دیکھ

    یہ فتنہ اور حشر سے پہلے اٹھا کے دیکھ

    یوں دیکھتا ہے تیرگی آب و گل میں کیا

    شعلوں سے کھیل دل کو جلا اور جلا کے دیکھ

    ہر زندگی کا نام نہ رکھ دل کی زندگی

    ایمان زندگی پہ نہ لا آزما کے دیکھ

    تیری تجلیوں سے کسی طرح کم نہیں

    دل کی تجلیوں کو کبھی دل میں آ کے دیکھ

    اب کے ادائے خاص سے کر امتحان دل

    جو برق طور پر نہ گری ہو گرا کے دیکھ

    ہاں اہل دل کے حال سے غفلت محال ہے

    اچھا یقیں نہیں تو مجھی کو بھلا کے دیکھ

    دنیا کو دیکھنا تو میسر نہیں تجھے

    ذرے کو دیکھنا ہے تو دنیا بنا کے دیکھ

    فانیؔ سفینہ اب بھی نہ ڈوبے تو کیا کرے

    طوفان کو نہ دیکھ ستم نا خدا کے دیکھ

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق,

    نعمان شوق

    دل کی طرف حجاب تکلف اٹھا کے دیکھ نعمان شوق

    موضوعات

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY