نزدیکیوں میں دور کا منظر تلاش کر

ندا فاضلی

نزدیکیوں میں دور کا منظر تلاش کر

ندا فاضلی

MORE BYندا فاضلی

    نزدیکیوں میں دور کا منظر تلاش کر

    جو ہاتھ میں نہیں ہے وہ پتھر تلاش کر

    سورج کے ارد گرد بھٹکنے سے فائدہ

    دریا ہوا ہے گم تو سمندر تلاش کر

    تاریخ میں محل بھی ہے حاکم بھی تخت بھی

    گمنام جو ہوئے ہیں وہ لشکر تلاش کر

    رہتا نہیں ہے کچھ بھی یہاں ایک سا سدا

    دروازہ گھر کا کھول کے پھر گھر تلاش کر

    کوشش بھی کر امید بھی رکھ راستہ بھی چن

    پھر اس کے بعد تھوڑا مقدر تلاش کر

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    چندن داس

    چندن داس

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق,

    نعمان شوق

    نزدیکیوں میں دور کا منظر تلاش کر نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY
    بولیے