نکھرے تو جگمگا اٹھے بکھرے تو رنگ ہے

اظہار اثر

نکھرے تو جگمگا اٹھے بکھرے تو رنگ ہے

اظہار اثر

MORE BYاظہار اثر

    نکھرے تو جگمگا اٹھے بکھرے تو رنگ ہے

    سورج ترے بدن کا بڑا شوخ و شنگ ہے

    تاریکیوں کے پار چمکتی ہے کوئی شے

    شاید مرے جنون سفر کی امنگ ہے

    کتنے غموں کا بار اٹھائے ہوئے ہے دل

    اک زاویہ سے شیشۂ نازک بھی سنگ ہے

    صحرا کی گود میں بھی ملیں گے بہت سے پھول

    یہ اپنے اپنے طور پہ جینے کا ڈھنگ ہے

    شاید جنوں ہی اب تو کرے رہبری اثرؔ

    ہم اس مقام پر ہیں جہاں عقل دنگ ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY