پل دو پل ہے پھر یہ سونا مٹی کا

اطہر ناسک

پل دو پل ہے پھر یہ سونا مٹی کا

اطہر ناسک

MORE BYاطہر ناسک

    پل دو پل ہے پھر یہ سونا مٹی کا

    کر دو مرا تیار بچھونا مٹی کا

    اک ٹھوکر سے دونوں ٹوٹ کے دیکھتے ہیں

    تو کانچ کا میں ہوں کھلونا مٹی کا

    تیرے شیش محل کی چھت بھی شیشے کی

    میرے گھر کا کونا کونا مٹی کا

    کتنے معنی رکھتا ہے ذرا غور تو کر

    کوزہ گر کے ہاتھ میں ہونا مٹی کا

    آگ کا ہنسنا دیکھ ہوا کے لہجے میں

    پانی کی آواز میں رونا مٹی کا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY
    بولیے