پیش وہ ہر پل ہے صاحب

وقار سحر

پیش وہ ہر پل ہے صاحب

وقار سحر

MORE BY وقار سحر

    پیش وہ ہر پل ہے صاحب

    پھر بھی اوجھل ہے صاحب

    آدھی ادھوری دنیا میں

    کون مکمل ہے صاحب

    آج تو پل پل مرنا ہے

    جینا تو کل ہے صاحب

    اچھی خاصی وحشت ہے

    اور مسلسل ہے صاحب

    دور تلک تپتا صحرا

    اور اک چھاگل ہے صاحب

    پورے چاند کی آدھی رات

    رقصاں جنگل ہے صاحب

    جھیل کنارے تنہائی

    اور اک پاگل ہے صاحب

    اپنا آپ مقابل ہے

    جیون دنگل ہے صاحب

    ہر خواہش کا قتل ہوا

    دل کیا مقتل ہے صاحب

    دل کا بوجھ کیا ہلکا

    آنکھ اب بوجھل ہے صاحب

    اب وہ کھڑکی بند ہوئی

    در بھی مقفل ہے صاحب

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Added to your favorites

    Removed from your favorites