رگوں میں زہر خاموشی اترنے سے ذرا پہلے

خوشبیر سنگھ شادؔ

رگوں میں زہر خاموشی اترنے سے ذرا پہلے

خوشبیر سنگھ شادؔ

MORE BYخوشبیر سنگھ شادؔ

    رگوں میں زہر خاموشی اترنے سے ذرا پہلے

    بہت تڑپی کوئی آواز مرنے سے ذرا پہلے

    ذرا سی بات ہے کب یاد ہوگی ان ہواؤں کو

    میں اک پیکر تھا ذروں میں بکھرنے سے ذرا پہلے

    میں اشکوں کی طرح اس درد کو بھی ضبط کر لیتا

    مجھے آگاہ تو کرتا ابھرنے سے ذرا پہلے

    کوئی سورج سے یہ پوچھے کہ کیا محسوس ہوتا ہے

    بلندی سے نشیبوں میں اترنے سے ذرا پہلے

    کہیں تصویر رسوا کر نہ دے میرے تصور کو

    مصور سوچ میں ہے رنگ بھرنے سے ذرا پہلے

    سنا ہے وقت کچھ خوش رنگ لمحے لے کے گزرا ہے

    مجھے بھی شادؔ کر جاتا گزرنے سے ذرا پہلے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    خوشبیر سنگھ شادؔ

    خوشبیر سنگھ شادؔ

    خوشبیر سنگھ شادؔ

    خوشبیر سنگھ شادؔ

    RECITATIONS

    خوشبیر سنگھ شادؔ

    خوشبیر سنگھ شادؔ

    خوشبیر سنگھ شادؔ

    رگوں میں زہر خاموشی اترنے سے ذرا پہلے خوشبیر سنگھ شادؔ

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY