Font by Mehr Nastaliq Web

aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

رند کی کائنات کیا ہے خاک

ناطق گلاوٹھی

رند کی کائنات کیا ہے خاک

ناطق گلاوٹھی

MORE BYناطق گلاوٹھی

    رند کی کائنات کیا ہے خاک

    تاک والی کوئی بڑا گھر تاک

    سوجھتا کیا ہے تجھ کو ناصح خاک

    وہ مثل ہے کہ آنکھوں آگے ناک

    پھیر لے جس طرف غرض چاہے

    آدمی بن گیا ہے موم کی ناک

    لو جنوں کی سواری آ پہنچی

    میرے دامن پہ چل رہا ہے چاک

    زرگری عقل کی معاذ اللہ

    اب کھٹائی میں پڑ گیا ادراک

    ہو گیا سب لحاظ ادب بے باق

    عشق بے تاب حسن ہے بے باک

    گرم جوشی تھی آبلہ پائی

    اب نہ وہ تپ نہ وہ تپک نہ تپاک

    شعر میں آ گیا ہے اب الہام

    لاؤ ناطقؔ لکھیں سپاک و نماک

    مأخذ :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے