رخصت ہوا تو بات مری مان کر گیا

خالد شریف

رخصت ہوا تو بات مری مان کر گیا

خالد شریف

MORE BY خالد شریف

    رخصت ہوا تو بات مری مان کر گیا

    جو اس کے پاس تھا وہ مجھے دان کر گیا

    بچھڑا کچھ اس ادا سے کہ رت ہی بدل گئی

    اک شخص سارے شہر کو ویران کر گیا

    دلچسپ واقعہ ہے کہ کل اک عزیز دوست

    اپنے مفاد پر مجھے قربان کر گیا

    کتنی سدھر گئی ہے جدائی میں زندگی

    ہاں وہ جفا سے مجھ پہ تو احسان کر گیا

    خالدؔ میں بات بات پہ کہتا تھا جس کو جان

    وہ شخص آخرش مجھے بے جان کر گیا

    مآخذ:

    • Book : Beesveen Sadi Ki Behtareen Ishqiya Ghazlen (Pg. 90)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY