شام ہوتے ہی چراغوں کو جلانے والے

افتخار شاھد ابو سعد

شام ہوتے ہی چراغوں کو جلانے والے

افتخار شاھد ابو سعد

MORE BYافتخار شاھد ابو سعد

    شام ہوتے ہی چراغوں کو جلانے والے

    لوٹ کے آتے نہیں چھوڑ کے جانے والے

    تو مری آنکھ کو بھایا ہے مرے دل کو نہیں

    تیرے اطوار تو لگتے ہیں زمانے والے

    عمر بھر تجھ کو مرا خواب نہیں آئے گا

    وصل کی شام مرا ہجر منانے والے

    یعنی کچھ روز تجھے چھوڑ کے میں بھی خوش تھا

    مجھ کو یہ بات بتاتے ہیں بتانے والے

    زندگی آج تجھے چھوڑ دیا ہے ہم نے

    ہم نہیں آج ترے ناز اٹھانے والے

    تو نے دیکھی مرے ہاتھوں کی مہارت لیکن

    وہ مرے پاؤں مرا چاک گھمانے والے

    شوق نظارہ لئے آنکھ کدھر جائے گی

    حسن والے ہیں ترے شہر سے جانے والے

    یہ بھی ممکن ہے ہوا کوئی تماشا کر دے

    ہم ترے نام کی شمعیں ہیں جلانے والے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY