شریک حال دل بیقرار آج بھی ہے

علیم اختر

شریک حال دل بیقرار آج بھی ہے

علیم اختر

MORE BYعلیم اختر

    شریک حال دل بیقرار آج بھی ہے

    کسی کی یاد مری غم گسار آج بھی ہے

    مجھے تو کل بھی نہ تھا ان پر اختیار کوئی

    اور ان کو مجھ پہ وہی اختیار آج بھی ہے

    تری طرف سے ظہور کرم نہیں نہ سہی

    ترے کرم کا مجھے اعتبار آج بھی ہے

    وہ رسم شوق کہاں اب مگر یہ عالم ہے

    کہ جیسے دل کو ترا انتظار آج بھی ہے

    کسی کا نقش کف پا تو اب کہاں لیکن

    نشان سجدہ سر رہ گزار آج بھی ہے

    وہ ان کا غم کہ نگاہیں بدل چکا اخترؔ

    کمال شوق کا پروردگار آج بھی ہے

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    شریک حال دل بیقرار آج بھی ہے نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY