شوق جب جرأت اظہار سے ڈر جائے گا

منظور ہاشمی

شوق جب جرأت اظہار سے ڈر جائے گا

منظور ہاشمی

MORE BYمنظور ہاشمی

    شوق جب جرأت اظہار سے ڈر جائے گا

    لفظ خود اپنا گلا گھونٹ کے مر جائے گا

    تیز رفتار ہواؤں کو یہ احساس کہاں

    شاخ سے ٹوٹے گا پتا تو کدھر جائے گا

    یہ چمکتا ہوا سورج بھی مری شام کے بعد

    رات کے گہرے سمندر میں اتر جائے گا

    صرف اک گھر کو ڈبونا ہی نہیں کام اس کا

    اب یہ سیلاب کسی اور کے گھر جائے گا

    ہیں ہر اک سمت یہی لوگ یہی دنیا ہے

    ان سے بچ کے کوئی جائے تو کدھر جائے گا

    کام اتنا تو کرے گا یہ ابلتا ہوا خون

    سارے منظر میں مرا رنگ تو بھر جائے گا

    مأخذ :
    • کتاب : Khayaabaan (Pg. 136)
    • Author : Hassan Abbas Raza
    • مطبع : Bazm-e-Khayaabaan-e-adab, Pakistan

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY