سمجھ کے دیکھو اے عارفاں تم کیا ہے حق نے یہ بھید کیسا

علیم اللہ

سمجھ کے دیکھو اے عارفاں تم کیا ہے حق نے یہ بھید کیسا

علیم اللہ

MORE BYعلیم اللہ

    سمجھ کے دیکھو اے عارفاں تم کیا ہے حق نے یہ بھید کیسا

    اپے ہے اول اپے ہے آخر اپے چہ مخفی اپے چہ پیدا

    اپے کہا کن اپے چہ فیکوں اپے ہے صانع اپے ہے صنعت

    اپے احد اور اپے چہ احمد اپے ہے آدم اپے ہے حوا

    اپے ہے مطلب اپے ہے طالب اپے ہے دل کش اپے ہے عاشق

    اپے چہ مجنوں اپے چہ لیلہ اپے ہے یوسف اپے زلیخا

    اپے چہ کہتا اپے چہ سنتا اپے ہے دانا اپے ہے بینا

    اپے چہ قایم رہے ہمیشہ اپے چہ قادر اپے توانا

    علیمؔ مت کہہ یہ راز مخفی پیا کی الفت میں رہ سدا تو

    اگر سنے اس سخن کو غافل گڑھے گا اوس پر کٹھن معما

    موضوعات

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY
    بولیے