ترے قریب رہوں یا کہ دور جاؤں میں

افتخار امام صدیقی

ترے قریب رہوں یا کہ دور جاؤں میں

افتخار امام صدیقی

MORE BY افتخار امام صدیقی

    ترے قریب رہوں یا کہ دور جاؤں میں

    ہے دل کا ایک ہی عالم تجھی کو چاہوں میں

    میں جانتا ہوں وہ رکھتا ہے چاہتیں کتنی

    مگر یہ بات اسے کس طرح بتاؤں میں

    جو چپ رہا تو وہ سمجھے گا بد گمان مجھے

    برا بھلا ہی سہی کچھ تو بول آؤں میں

    پھر اس کے بعد تعلق میں فاصلے ہوں گے

    مجھے سنبھال کے رکھنا بچھڑ نہ جاؤں میں

    محبتوں کی پرکھ کا یہی تو رستہ ہے

    تری تلاش میں نکلوں تجھے نہ پاؤں میں

    مآخذ:

    • کتاب : Junoon (Pg. 113)
    • Author : Naseem Muqri
    • مطبع : Naseem Muqri (1990)
    • اشاعت : 1990

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY