aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

تری صورت مجھے بتاتی ہے

محمد علی ساحل

تری صورت مجھے بتاتی ہے

محمد علی ساحل

MORE BYمحمد علی ساحل

    تری صورت مجھے بتاتی ہے

    یاد میری تجھے بھی آتی ہے

    اس کے اک بار دیکھنے کی ادا

    دل میں سو حسرتیں جگاتی ہے

    میرے دل میں وہ آئے ہیں ایسے

    جیسے آنگن میں دھوپ آتی ہے

    خواب میں جب بھی دیکھتا ہوں اسے

    نیند آنکھوں سے روٹھ جاتی ہے

    اپنی مرضی سے ہم نہیں چلتے

    کوئی طاقت ہمیں چلاتی ہے

    ہم ہیں تہذیب کے علمبردار

    ہم کو اردو زبان آتی ہے

    میں تو ساحل ہوں موج دریا کی

    مجھ کو خود ہی گلے لگاتی ہے

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    محمد علی ساحل

    محمد علی ساحل

    مأخذ:

    Kirdar (Pg. B-43 E-44)

    • مصنف: محمد علی ساحل
      • اشاعت: 2008
      • ناشر: وائس پبلی کیشنسز کلیان پور، لکھنؤ
      • سن اشاعت: 2014

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے