تشنگی دل کی بجھانا تو خبر کر دینا

منصور عثمانی

تشنگی دل کی بجھانا تو خبر کر دینا

منصور عثمانی

MORE BYمنصور عثمانی

    تشنگی دل کی بجھانا تو خبر کر دینا

    اشک آنکھوں میں چھپانا تو خبر کر دینا

    ہم نے کچھ گیت لکھے ہیں جو سنانا ہیں تمہیں

    تم کبھی بزم سجانا تو خبر کر دینا

    حادثے راہ محبت کا مقدر ٹھہرے

    جب ہمیں دل سے بھلانا تو خبر کر دینا

    جن کتابوں میں چھپائے ہیں مرے خط تم نے

    ان کتابوں کو جلانا تو خبر کر دینا

    آج بیگانہ سمجھتے ہو تو سمجھو لیکن

    جب ستائے یہ زمانہ تو خبر کر دینا

    میں ضرور آؤں گا منصورؔ تمہاری خاطر

    تم جو مقتل کو سجانا تو خبر کر دینا

    مأخذ :
    • کتاب : Kashmakash (Pg. 105)
    • Author : Mansoor Usmani
    • مطبع : Najma House, Baradari, Moradabad (2007)
    • اشاعت : 2007

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY