تو نہیں تو زندگی میں اور کیا رہ جائے گا

افتخار امام صدیقی

تو نہیں تو زندگی میں اور کیا رہ جائے گا

افتخار امام صدیقی

MORE BY افتخار امام صدیقی

    تو نہیں تو زندگی میں اور کیا رہ جائے گا

    دور تک تنہائیوں کا سلسلہ رہ جائے گا

    کیجئے کیا گفتگو کیا ان سے مل کر سوچئے

    دل شکستہ خواہشوں کا ذائقہ رہ جائے گا

    درد کی ساری تہیں اور سارے گزرے حادثے

    سب دھواں ہو جائیں گے اک واقعہ رہ جائے گا

    یہ بھی ہوگا وہ مجھے دل سے بھلا دے گا مگر

    یوں بھی ہوگا خود اسی میں اک خلا رہ جائے گا

    دائرے انکار کے اقرار کی سرگوشیاں

    یہ اگر ٹوٹے کبھی تو فاصلہ رہ جائے گا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    چترا سنگھ

    چترا سنگھ

    مآخذ:

    • کتاب : Junoon (Pg. 114)
    • Author : Naseem Muqri
    • مطبع : Naseem Muqri (1990)
    • اشاعت : 1990

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY