اجالا کیسا اجالے کا خواب لا نہ سکے

اعزاز افصل

اجالا کیسا اجالے کا خواب لا نہ سکے

اعزاز افصل

MORE BYاعزاز افصل

    اجالا کیسا اجالے کا خواب لا نہ سکے

    سحر سے مانگ کے ہم آفتاب لا نہ سکے

    ہم اپنے چہرۂ بے داغ کے لئے اے عقل

    تری دکان سے کوئی نقاب لا نہ سکے

    جو چاند پر بھی گئے ہم تو خاک ہی لائے

    زمیں کی نذر کو اک آفتاب لا نہ سکے

    گئے تو تھے ترے جلووں کو جانچنے لیکن

    بچا کے ہم نظر انتخاب لا نہ سکے

    زمیں کی بات زمیں کی زباں میں کہنا تھی

    ہم آسمان سے کوئی کتاب لا نہ سکے

    مآخذ
    • کتاب : Kalam-e-aizaz afzal (Pg. 61)
    • Author : Aizaz Afzal
    • مطبع : Usmania Book Depot

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY