ان کا جلوہ نہیں دیکھا جاتا

حسن بریلوی

ان کا جلوہ نہیں دیکھا جاتا

حسن بریلوی

MORE BYحسن بریلوی

    ان کا جلوہ نہیں دیکھا جاتا

    دیکھ دیکھا نہیں دیکھا جاتا

    قتل کرنے کی وہ جلدی تھی تمہیں

    اب تڑپنا نہیں دیکھا جاتا

    چشم خوں بار خدا رحم کرے

    تیرا رونا نہیں دیکھا جاتا

    الفت ان کی نہیں چھوڑی جاتی

    حال دل کا نہیں دیکھا جاتا

    دیکھنے ہی کے لئے ہیں آنکھیں

    ان سے کیا کیا نہیں دیکھا جاتا

    پر تری برق تجلی کا جمال

    خوب دیکھا نہیں دیکھا جاتا

    نامہ پورا وہ حسنؔ کیا دیکھیں

    نام پورا نہیں دیکھا جاتا

    مأخذ :
    • کتاب : Intekhab-e-Sukhan(Jild-2) (Pg. 128)
    • Author : Hasrat Mohani
    • مطبع : uttar pradesh urdu academy (1983)
    • اشاعت : 1983

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY