اس کی ہوں یا اپنی ہوں

گل افشاں

اس کی ہوں یا اپنی ہوں

گل افشاں

MORE BYگل افشاں

    اس کی ہوں یا اپنی ہوں

    کوئی بتائے کس کی ہوں

    اپنے گھر میں رہ کر بھی

    اس کے گھر میں رہتی ہوں

    یا پھر وہ ہی سچا ہے

    یا پھر میں ہی جھوٹی ہوں

    تنہائی سو جاتی ہے

    اور میں جاگتی رہتی ہوں

    پتھر باتیں کرتے ہیں

    میں بھی باتیں کرتی ہوں

    وہ تو سیدھا سادہ ہے

    پر میں خود سے ڈرتی ہوں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY