وعدۂ وصلت سے دل ہو شاد کیا

مومن خاں مومن

وعدۂ وصلت سے دل ہو شاد کیا

مومن خاں مومن

MORE BYمومن خاں مومن

    وعدۂ وصلت سے دل ہو شاد کیا

    تم سے دشمن کی مبارک باد کیا

    why should vows of union now enthuse?

    compliments from foes like you, what use?

    کچھ قفس میں ان دنوں لگتا ہے جی

    آشیاں اپنا ہوا برباد کیا

    being caged now-a-days is easeful rest

    is it that someone has destroyed my nest?

    نالۂ پیہم سے یاں فرصت نہیں

    حضرت ناصح کریں ارشاد کیا

    there is no leisure from constant lament

    O preacher what account can I present

    ہیں اسیر اس کے جو ہے اپنا اسیر

    ہم نہ سمجھے صید کیا صیاد کیا

    when imprisoned by my prisoner then

    who is captor, captive's hard to ken

    شوخ بازاری تھی شیریں بھی مگر

    ورنہ فرق خسرو و فرہاد کیا

    ------

    -----

    نشۂ الفت سے بھولے یار کو

    سچ ہے ایسی بے خودی میں یاد کیا

    love's headiness made me forget her too

    in stupor nought can one recall it's true

    نالہ اک دم میں اڑا ڈالے دھوئیں

    چرخ کیا اور چرخ کی بنیاد کیا

    a plaintive cry of mine will vaporize

    the very foundations of lofty skies

    جب مجھے رنج دل آزاری نہ ہو

    بے وفا پھر حاصل بیداد کیا

    torture's not a source of pain to me

    O faithless one why then this cruelty

    پانوں تک پہنچی وہ زلف خم بہ خم

    سرو کو اب باندھئے آزاد کیا

    curling tresses reach her feet you see

    can the cypress now held to be free?

    کیا کروں اللہ سب ہیں بے اثر

    ولولہ کیا نالہ کیا فریاد کیا

    Lord! what can I do? Of no avail

    is to weep or vent or even wail

    ان نصیبوں پر کیا اختر شناس

    آسماں بھی ہے ستم ایجاد کیا

    just in counting stars my life is spent

    what tortures these cruel skies invent

    روز محشر کی توقع ہے عبث

    ایسی باتوں سے ہو خاطر شاد کیا

    futile is the hope for judgement day

    such talk won't raise my spirits any way

    گر بہائے خون عاشق ہے وصال

    انتقام زحمت جلاد کیا

    ------

    ------

    بت کدہ جنت ہے چلیے بے ہراس

    لب پہ مومنؔ ہرچہ بادا باد کیا

    the idol's house is heaven, come don’t fret

    whatever be Momin, there's nothing to regret

    RECITATIONS

    فصیح اکمل

    فصیح اکمل

    فصیح اکمل

    وعدۂ وصلت سے دل ہو شاد کیا فصیح اکمل

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY