وحشت دست و گریباں نہ تجھے ہے نہ مجھے

سلطان غوری

وحشت دست و گریباں نہ تجھے ہے نہ مجھے

سلطان غوری

MORE BY سلطان غوری

    وحشت دست و گریباں نہ تجھے ہے نہ مجھے

    جرأت دشت و بیاباں نہ تجھے ہے نہ مجھے

    دل کے کہنے سے عبث اس کی تمنا کی تھی

    حسرت رنگ بہاراں نہ تجھے ہے نہ مجھے

    چھوڑ آئے تری خاطر قفس عافیت

    راس اب صحن گلستاں نہ تجھے ہے نہ مجھے

    اپنی ہی آگ میں جلنے کی قسم کھائی ہے

    خواہش شمع فروزاں نہ تجھے ہے نہ مجھے

    یاد آئی تو فقط چاند کا چہرہ دیکھا

    تاب نور رخ تاباں نہ تجھے ہے نہ مجھے

    کچھ نہ کچھ اس نے رہ و رسم نبھائی ہوگی

    بے سبب شکوۂ سلطاںؔ نہ تجھے ہے نہ مجھے

    مآخذ:

    • کتاب : Shora-e-London (Pg. 115)
    • Author : Jauhar Zahiri
    • مطبع : Books From India (U.K) Ltd. 45, Museum Street,Londan W.C-1 (1985)
    • اشاعت : 1985

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY