وہ بیزار مجھ سے ہوا زار میں ہوں

امام بخش ناسخ

وہ بیزار مجھ سے ہوا زار میں ہوں

امام بخش ناسخ

MORE BYامام بخش ناسخ

    وہ بیزار مجھ سے ہوا زار میں ہوں

    وہ مے خوار غیروں میں ہے خوار میں ہوں

    نہیں عشق سے زرد زردار میں ہوں

    اگر ہے وہ یوسف خریدار میں ہوں

    تمنا ہے ساقی کبھی بزم مے میں

    وہ سرشار ہو اور ہشیار میں ہوں

    ہوئی جمع بے دردی دردمندی

    دل آزار وہ ہے ستم گار میں ہوں

    وہ کرتا ہے باتیں میں کرتا ہوں آہیں

    گہر بار وہ ہے شرر بار میں ہوں

    وہی بولتا ہے جو میں بولتا ہوں

    اگر وہ ہے بلبل تو منقار میں ہوں

    دگرگوں ہے ہر آن وضع محبت

    کبھی غیر میں ہوں کبھی یار میں ہوں

    کہا حضرت دردؔ نے خوب ناسخؔ

    یہ زلف بتاں کا گرفتار میں ہوں

    مآخذ
    • کتاب : Ghazal Usne Chhedi(2) (Pg. 172)
    • Author : Farhat Ehsas
    • مطبع : Rekhta Books (2017)
    • اشاعت : 2017

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY