وہ دور قریب آ رہا ہے (ردیف .. ی)

اطہر نفیس

وہ دور قریب آ رہا ہے (ردیف .. ی)

اطہر نفیس

MORE BYاطہر نفیس

    وہ دور قریب آ رہا ہے

    جب داد ہنر نہ مل سکے گی

    اس شب کا نزول ہو رہا ہے

    جس شب کی سحر نہ مل سکے گی

    پوچھو گے ہر اک سے ہم کہاں ہیں

    اور اپنی خبر نہ مل سکے گی

    آساں بھی نہ ہوگا گھر میں رہنا

    توفیق سفر نہ مل سکے گی

    خنجر سی زباں کا زخم کھا کے

    مرہم سی نظر نہ مل سکے گی

    اس راہ سفر میں سایۂ افگن

    اک شاخ شجر نہ مل سکے گی

    جاؤ گے کسی کی انجمن میں

    پر اس سے نظر نہ مل سکے گی

    اک جنس وفا ہے جس کو ہر سو

    ڈھونڈو گے مگر نہ مل سکے گی

    سیلاب ہوس امڈ رہا ہے

    اک تشنہ نظر نہ مل سکے گی

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق,

    نعمان شوق

    وہ دور قریب آ رہا ہے (ردیف .. ی) نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY