وہ عطر خاک اب کہاں پانی کی باس میں

آفتاب اقبال شمیم

وہ عطر خاک اب کہاں پانی کی باس میں

آفتاب اقبال شمیم

MORE BYآفتاب اقبال شمیم

    وہ عطر خاک اب کہاں پانی کی باس میں

    ہم نے بدل لیا ہے پیالہ گلاس میں

    کل رات آسمان مرا میہماں رہا

    کیا جانے کیا کشش تھی مرے التماس میں

    ممنون ہوں میں اپنی غزل کا یہ دیکھیے

    کیا کام کر گئی مرے غم کے نکاس میں

    میں قید ہفت رنگ سے آزاد ہو گیا

    کل شب نقب لگا کے مکان حواس میں

    پھر یہ فساد فرقہ و مسلک ہے کس لئے

    تو اور میں تو ایک ہیں اپنی اساس میں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY