Font by Mehr Nastaliq Web

aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

وہ میرے ساتھ چلنے پر اگر تیار ہو جائے

احمد عادل

وہ میرے ساتھ چلنے پر اگر تیار ہو جائے

احمد عادل

MORE BYاحمد عادل

    وہ میرے ساتھ چلنے پر اگر تیار ہو جائے

    بھلے منزل کی جانب سے مجھے انکار ہو جائے

    مرا فن اداکاری نمایاں ہو کے ابھرے گا

    ذرا تیری کہانی میں مرا کردار ہو جائے

    نشاط انگیز شاموں کا تسلسل اس طرح ٹوٹا

    کہ گہری نیند سے یک دم کوئی بیدار ہو جائے

    اگر اپنی مدھر آواز میں نغمہ سنا دے وہ

    تو راہ محفل یاراں ذرا ہموار ہو جائے

    اگر وہ اک نظر دیکھے مرے جذبے کی سچائی

    نصیحت چھوڑ کر ناصح مرا غم خوار ہو جائے

    تری آنکھیں بتاتی ہیں تجھے مجھ سے محبت ہے

    مگر دل کی تسلی کو ذرا اظہار ہو جائے

    سمجھ لو تیرگی دیرینہ ساتھی ہو گئی عادلؔ

    چراغ جاں جلانا جب تمہیں دشوار ہو جائے

    مأخذ :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے