وہ نگاہوں کو جب بدلتے ہیں

اقبال صفی پوری

وہ نگاہوں کو جب بدلتے ہیں

اقبال صفی پوری

MORE BYاقبال صفی پوری

    وہ نگاہوں کو جب بدلتے ہیں

    دل سنبھالے نہیں سنبھلتے ہیں

    منزلیں دور ہیں کبھی نزدیک

    ہر قدم فاصلے بدلتے ہیں

    کون جانے کہ اک تبسم سے

    کتنے مفہوم غم نکلتے ہیں

    نہ گزر اتنی کج روی سے کہ لوگ

    تیرے نقش قدم پہ چلتے ہیں

    آگ بھی ان گھروں کو لگتی ہے

    جن گھروں میں چراغ جلتے ہیں

    جب بھی اٹھتی ہے وہ نظر اقبالؔ

    شمع کی طرح دل پگھلتے ہیں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY