یہ بھی نہیں بیمار نہ تھے

آشفتہ چنگیزی

یہ بھی نہیں بیمار نہ تھے

آشفتہ چنگیزی

MORE BY آشفتہ چنگیزی

    یہ بھی نہیں بیمار نہ تھے

    اتنے جنوں آثار نہ تھے

    لوگوں کا کیا ذکر کریں

    ہم بھی کم عیار نہ تھے

    گھر میں اور بہت کچھ تھا

    صرف در و دیوار نہ تھے

    تیری خبر مل جاتی تھی

    شہر میں جب اخبار نہ تھے

    پہلے بھی سب بکتا تھا

    خوابوں کے بازار نہ تھے

    سب پر ہنسنا شیوہ تھا

    جب تک خود اس پار نہ تھے

    موت کی باتیں پیاری تھیں

    مرنے کو تیار نہ تھے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY