یہ چاند جو بچوں کا کھلونا ہے مری دوست

ریحانہ قمر

یہ چاند جو بچوں کا کھلونا ہے مری دوست

ریحانہ قمر

MORE BYریحانہ قمر

    یہ چاند جو بچوں کا کھلونا ہے مری دوست

    کھو جائے گا اس بات کا رونا ہے مری دوست

    یہ زردی رخسار نہ مٹی میں ملے گی

    یہ زردی رخسار تو سونا ہے مری دوست

    چل باغ میں روتے ہیں گلابوں سے لپٹ کر

    گھر میں بھی تو تکیہ ہی بھگونا ہے مری دوست

    موجود بھی ایسے ہوں کہ موجود نہیں ہوں

    ثابت مرے ہونے سے نہ ہونا ہے مری دوست

    دھرتی نے بھی سوتے میں ہمیں زخم دیے ہیں

    یہ سیج بھی کانٹوں کا بچھونا ہے مری دوست

    اوروں کی طرح مجھ سے بچھڑ جائے گا وہ بھی

    ہونا ہے کسی روز یہ ہونا ہے مری دوست

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY