یہ دنیا ہے یہاں دل کو لگانا کس کو آتا ہے

شکیل بدایونی

یہ دنیا ہے یہاں دل کو لگانا کس کو آتا ہے

شکیل بدایونی

MORE BY شکیل بدایونی

    یہ دنیا ہے یہاں دل کو لگانا کس کو آتا ہے

    ہزاروں پیار کرتے ہیں نبھانا کس کو آتا ہے

    یہ دنیا ہے یہاں دل میں سمانا کس کو آتا ہے

    مٹانے والے لاکھوں ہیں بنانا کس کو آتا ہے

    نگاہیں پھیر لیں تم نے تو ہم کس کی طرف دیکھیں

    تمہی کہہ دو محبت کا فسانا کس کو آتا ہے

    وفا کا یوں تو دم بھرتے ہیں اس دنیا میں سب لیکن

    وفا کے نام پر مٹ کر دکھانا کس کو آتا ہے

    مآخذ:

    • کتاب : Kulliyat-e-Shakiil Badaayuuni (Pg. 791)
    • Author : Shakiil Badaayuuni
    • مطبع : Farid Book Depot (Pvt.) Ltd

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY