یہ حادثہ مجھے حیران کر گیا سر شام

پیرزادہ قاسم

یہ حادثہ مجھے حیران کر گیا سر شام

پیرزادہ قاسم

MORE BYپیرزادہ قاسم

    یہ حادثہ مجھے حیران کر گیا سر شام

    جو زخم صبح ملا تھا وہ بھر گیا سر شام

    ملے تھے ہم کہیں کار جہاں کے میلے میں

    اسے بھی جلدی تھی اور میں بھی گھر گیا سر شام

    یہ آج کس کو اچانک مرا خیال آیا

    چراغ راہ میں یہ کون دھر گیا سر شام

    خیال یار کی فرصت بھی اب کسے ہے نصیب

    یہ پھول صبح کھلا اور بکھر گیا سر شام

    تمام دن کی تھکن سے میں بجھ رہا تھا مگر

    کسی کی یاد کا چہرہ نکھر گیا سر شام

    شب فراق کا احوال یاد آ ہی گیا

    پھر ایک تیر سا دل میں اتر گیا سر شام

    یہ صبح و شام مرے اس قدر ہی میرے ہیں

    کہ جی اٹھا ہوں سحر دم تو مر گیا سر شام

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    پیرزادہ قاسم

    پیرزادہ قاسم

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY