یہ جو مجھ کو گرا دیا گیا ہے

قمر رضا شہزاد

یہ جو مجھ کو گرا دیا گیا ہے

قمر رضا شہزاد

MORE BYقمر رضا شہزاد

    یہ جو مجھ کو گرا دیا گیا ہے

    آپ کو راستہ دیا گیا ہے

    کوئی تیری مثال ہی نہ رہے

    آئنہ بھی ہٹا دیا گیا ہے

    دکھ تو یہ ہے ترے بچھڑنے کا دکھ

    آنسوؤں میں بہا دیا گیا ہے

    ایک دل ہی تھا ضو فشاں سر شام

    یہ دیا بھی بجھا دیا گیا ہے

    مجھ کو اس دشت عشق میں شہزادؔ

    قیس کا مرتبہ دیا گیا ہے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY