یہ کس خلش نے پھر اس دل میں آشیانہ کیا

فیض احمد فیض

یہ کس خلش نے پھر اس دل میں آشیانہ کیا

فیض احمد فیض

MORE BYفیض احمد فیض

    یہ کس خلش نے پھر اس دل میں آشیانہ کیا

    پھر آج کس نے سخن ہم سے غائبانہ کیا

    غم جہاں ہو رخ یار ہو کہ دست عدو

    سلوک جس سے کیا ہم نے عاشقانہ کیا

    تھے خاک راہ بھی ہم لوگ قہر طوفاں بھی

    سہا تو کیا نہ سہا اور کیا تو کیا نہ کیا

    خوشا کہ آج ہر اک مدعی کے لب پر ہے

    وہ راز جس نے ہمیں راندۂ زمانہ کیا

    وہ حیلہ گر جو وفا جو بھی ہے جفاخو بھی

    کیا بھی فیضؔ تو کس بت سے دوستانہ کیا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    جگجیت سنگھ

    جگجیت سنگھ

    RECITATIONS

    فیض احمد فیض

    فیض احمد فیض

    فیض احمد فیض

    یہ کس خلش نے پھر اس دل میں آشیانہ کیا فیض احمد فیض

    مأخذ :
    • کتاب : Nuskha Hai Wafa (Pg. 553)

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY