یہ کس نے دور سے آواز دی ہے

کاملؔ بہزادی

یہ کس نے دور سے آواز دی ہے

کاملؔ بہزادی

MORE BYکاملؔ بہزادی

    یہ کس نے دور سے آواز دی ہے

    فضاؤں میں ابھی تک نغمگی ہے

    ستارے ڈھونڈتے ہیں ان کا آنچل

    شمیم صبح دامن چومتی ہے

    تعلق ہے نہ اب ترک تعلق

    خدا جانے یہ کیسی دشمنی ہے

    ردائے زلف میں گزری تھی اک شب

    مگر آنکھوں میں اب تک نیند سی ہے

    مری تقدیر میں بل پڑ رہے ہیں

    تری زلفوں میں شاید برہمی ہے

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    یہ کس نے دور سے آواز دی ہے نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY