یہ طے نہیں کہ سدا آنسوؤں سے لکھیں گے

معین شاداب

یہ طے نہیں کہ سدا آنسوؤں سے لکھیں گے

معین شاداب

MORE BYمعین شاداب

    یہ طے نہیں کہ سدا آنسوؤں سے لکھیں گے

    کبھی تو ہم بھی غزل خوشبوؤں سے لکھیں گے

    ہماری پیاس کا احوال ریگ زاروں پر

    سلگتے چیختے موسم لوؤں سے لکھیں گے

    صحافیوں کو کہاں حال دل سنا بیٹھے

    ذرا سی بات کئی زاویوں سے لکھیں گے

    نہ خوش ہو جان کے بے دست ہم ترا انجام

    انہیں تراشے گئے بازوؤں سے لکھیں گے

    بھلے ہی ٹوٹ چکی ہیں مگر ہمیں سونپو

    کہ ہم کنارہ انہیں چپوؤں سے لکھیں گے

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY